Ramadan New Kalam -Zikar hai kauno makan me Aamade ramadan ka||رمضان نظم...

غالب اکیڈمی نئی دہلی میں برقی اعظمی کے شعری مجموعے محشر خیال کا اجرا

دیا ادبی فورم کے ۱۹۷ ویں عالمی آن لاین فی البدیہہ طرحی مشاعرے بتاریخ ۲ جون ۲۰۱۷ کے لئے میری طبع آزمائی احمد علی برقی اعظمی



دیا ادبی فورم کے ۱۹۷ ویں عالمی آن لاین فی البدیہہ طرحی مشاعرے بتاریخ ۲ جون ۲۰۱۷ کے لئے میری طبع آزمائی
احمد علی برقی اعظمی
وہ ہوتے میری جگہ تو جَلا بُھنا کرتے
جو سنتے سوزِ دروں میرا سر دُھنا کرتے
سناتے رہتے ہیں ہروقت اپنے مَن کی بات
’’ کبھی کبھی تو مری داستاں سنا کرتے ‘‘
جو کرکے خونِ تمنا کوئی چلا جائے
تو ایسے حال میں روتے نہیں تو کیا کرتے
شبِ فراق ہے کیا جان جاتے وہ خود بھی
جو مثلِ شمع وہ میری طح جلا کرتے
سنا رہے تھے فقط سرگذشت وہ اپنی
اگر وہ سنتے تو ہم عرضِ مدعا کرتے
مذاق اُڑاتے نہ سب قول و فعل کا اُن کے
وہ اپنا فرض بخوبی اگر ادا کرتے
قصیدہ پڑھتے ہیں خود اپنی کامیابی کا
وہ کاش سُرخیٔ اخبار بھی پڑھا کرتے
بغور پڑھتے جو برقی نوشتۂ دیوار
تو خود کو سب کا مسیحا نہ وہ کہا کرتے


Dr Ahmed Ali Barqi Azmi - Sukhanwar Chicago - Grand Aalmi Mushaera - 29M...







Dr Ahmed Ali Barqi Azmi - Sukhanwar Chicago - Grand Aalmi Mushaera - 29May2020


Ahmad Ali Barqi Azmi in Hot Cake Studio





Ahmad Ali Barqi Azmi in Hot Cake Studio


Woh Bhool Gaya Mujh se BarsoN Ki Shenasaaii- A Ghazal by Ahmad Ali Barqi Azmi Recited By Syed Ayaz Mufti وہ بھول گیا مجھ سے برسوں کی شناسائی کلام : احمد علی برقی اعظمی آواز خوان : محبی سید ایاز مفتی


Woh Bhool Gaya Mujh se BarsoN Ki Shenasaaii- A Ghazal by Ahmad Ali Barqi Azmi Recited By Syed Ayaz Mufti
وہ بھول گیا مجھ سے برسوں کی شناسائی
کلام : احمد علی برقی اعظمی
آواز خوان : محبی سید ایاز مفتی

Woh Bhool Gaya Mujh se BarsoN Ki Shenasaaii- A Ghazal by Ahmad Ali Barqi Azmi​ Recited By Syed Ayaz Mufti​ وہ بھول گیا مجھ سے برسوں کی شناسائی کلام : احمد علی برقی اعظمی آواز خوان : محبی سید ایاز مفتی





Woh Bhool Gaya Mujh se BarsoN Ki Shenasaaii- A Ghazal by Ahmad Ali Barqi Azmi​ Recited By Syed Ayaz Mufti​

وہ بھول گیا مجھ سے برسوں کی شناسائی

کلام : احمد علی برقی اعظمی

آواز خوان : محبی سید ایاز مفتی

ईद पे खूबसूरत सी ग़ज़ल एक बार जरूर सुनें A Best Presentation Of Star News Portal On The Festival Of Eid Presented by Sayeda Tabassum Manzoor Mumbay



ईद पे खूबसूरत सी ग़ज़ल एक बार जरूर सुनें A Best Presentation Of Star News Portal On The Festival Of Eid Presented by Sayeda Tabassum Manzoor Mumbay




 کررہا ہے خدمت شعرو
ادب اسٹار نیوز
 ہے تبسم
کی یہ جس میں پیشکش اک دلپذیر
 پیش کرتا
ہوں مبارکباد میں اس کی انھیں
 کام جو
وہ کررہی ہیں ہے وہ لانا جوئے شیر
 ڈاکٹر
احمد علی برقی اعظمی


Kar raha hai khidmat e Sher o Adab
Star News
 Hai tabassum ki yeh jis meiN peshkash ek
dilpazeer
 Pesh karta hooN mubarakbad maiN is ki unheiN
 kaam jo woh kar rahi haiN hai woh lana ju e
sheer
 Dr. Ahmad Ali Barqi Azmi



अहमद अली बर्क़ी आज़मी और सय्यद रियाज रहीम के साथ दिलचस्प ग़ज़लों का सफर بشکریہ اسٹار نیوز پورٹل





بشکریہ اسٹار نیوز پورٹل

اسٹار نیوز کے یوٹیوب چینل کے ادبی پروگرام غزلوں کے سفر پر منظوم تاثرات

احمد علی برقی اعظمی نٸی دہلی

کررہا ہے پیش غزلوں کا سفر اسٹارنیوز

ہر طرف چرچا ہے جس کا انجمن در انجمن

پیش کرتا ہوں مبارکباد میں اس کی اسے

جس سے روشن ہے جہاں میں شمع بزم علم و فن

ہے نہایت روح پرور اس کا طرز پیشکش

دن بہ دن بڑھتا رہے اس کا یونہی یہ بانکپن

فرق کوٸی بھی نہیں ہے آج قرب و بعد میں

ممبٸی سے سن رہے ہیں اس کو ارباب وطن

اس کی بزم آراٸیاں ہوں مرجع اہل نظر

اس کی برقی اعظمی ہو سرخرو بزم سخن

Coronavirus Poetry | Ahmad Ali Barqi Azmi Poetry | Urdu Shayari

Ahmad Ali Barqi Azmi Recites His Naat in The Online International Natia Mushaira Of Sukhanwar Chicago





Ahmad Ali Barqi Azmi Recites His Naat in The Online International Natia Mushaira Of Sukhanwar Chicago

ہم اپنی سنائیں گے ان کو سنتے وہ نہیں احوال تو کیا : ایک فی البدیہہ طرحی غزل : برقی اعظمی


دل سے بے ساختہ جو شعر نکل جاتا ہے : احمد علی برقی اعظمی




 اکتیسویں  عالمی عبدالستار مفتی میموریل آن لائن فی البدیہہ مشاعرے لے لئے میری طبع آزمائی
احمد علی برقی اعظمی
دل سے بے ساختہ جو شعر نکل جاتا ہے
’’ شعر کیا لفظ کا مفہوم بدل جاتا ہے‘‘
اسے کہتے ہیں سبھی اہلِ جہاں ابن الوقت
وقت کے ساتھ جو انسان بدل جاتا ہے
منحصر کاتبِ تقدیر پہ سب کچھ ہے مرا
وہ جو چاہے تو برا وقت بھی ٹَل جاتا ہے
باغباں کیسے کہوں گلشنِ ہستی کا اسے
غنچہ و گل کو جو بے درد مَسَل جاتا ہے
وعدہ حشر سے کم اس کا نہیں ہر وعدہ
ایک بچے کی طرح دل یہ بہل جاتا ہے
اُس ہُنرمند کا لیتا نہیں کیوں نام کوئی
دے کے شہکار جو اک تاج محل جاتا ہے
کیوں ہے شہزور کے وہ مَدِ مقابل خاموش
زور کمزور پہ جس شخص کا چل جاتا ہے
کاش کرلیتے اسے یاد وہ جب زندہ تھا
جو مسائل کا لئے ساتھ میں حَل جاتا ہے
غازۂ حسن ہے مزدور کی محنت جس کا
اس کا رخسار کڑی دھوپ میں جَل جاتا ہے
یہیں رہ جائے گا سب جاہ حشم اے برقی
ساتھ انساں کے فقط حُسنِ عمل جاتا ہے


Ahmad Ali Barqi Azmi Recites A Ghazal







Ahmad Ali Barqi Azmi Recites A Ghazal

Hidayat Ki Roshni - Ahmad Ali Barqi Azmi (india) | Naat E Rasool By Urdu Shayari | Urdu Shayari









Hidayat Ki Roshni - Ahmad Ali Barqi Azmi (india) | Naat E Rasool By Urdu Shayari | Urdu Shayari